Khusboo Hai Do Aalam Main Teri Ae Gul e Cheeda

Khusboo Hai Do Aalam Main Teri Ae Gul e Cheeda
Kis Moun Se Bayan houn Tere Ausaaf Hameeda

خوشبو ہے دو عالم میں تیری اے گُل چیدہ
کس منہ سے بیاں ہوں تیرے اوصاف حمیدہ

تُجھ سا کوئی آیا ہے نہ آئے گا جہاں میں
دیتا ہے گواہی یہی عالم کا جریدہ

مضمر تیری تقلید میں عالم کی بھلائی
میرا یہی ایماں ہے یہی میرا عقیدہ

اے رحمت عالم تیری یادوں کی بدولت
کس درجہ سکوں میں ہے میرا قلب تپیدہ

خیرات مجھے اپنی محبت کی عطا کر
آیا ہوں بڑی دور سے با دامان دریدہ

یوں دور ہوں تائب میں حریم نبویؐ سے
صحرا میں ہو جس طرح کوئی شاخ بریدہ

حفیظ تائب
Hafeez Taib

Thanks to Mustafa Khan for Sharing the Naat

Balaghal-ula be-Kamal-e-hi

Balaghal-ula be-Kamal-e-hi

بلغ العلی بکمالہ

پہنچے بلندی پر اپنے کمال سے

Kashafad-duja be-Jamaal-e-hi

کشف الدجی بجمالہ

دور کر دیا اندھیرا اپنے جمال سے

Hasunat jamee’u Khisaal-e-hi

حسنت جمیع خصالہ

حسیں ہیں آپ کی سب خصلتیں

Sallu alae-hi wa Aal-e-hi

صلو علیہ و آلہ

درود بھیچو آپؐ پر اور آپؐ کی آل پر

شیخ سعدی شیرازی

Sheikh Saadi Shirazi

Tu Jo Allah Ka Mahboob Howa Khoob Howa

Tu Jo Allah Ka Mahboob Howa Khoob Howa
Ya Nabi Khoob Howa Khoob Howa Khoob Hova

تو جو اللہ کا محبوب ہوا خوب ہوا
یا نبی خوب ہوا خوب ہوا خوب ہوا

شب معراج یہ کہتے تھے فرشتے باہم
سخن طالب و مطلوب ہوا خوب ہوا

حشر میں امت عاصی کا ٹھکانا ہی نہ تھا
بخشوانا تجھے مرغوب ہوا خوب ہوا

تھا سبھی پیش نظر معرکہ کرب و بلا
صبر میں ثانی ایوب ہوا خوب ہوا

داغ ہے روز قیامت مری شرم اسکے ہاتھ
میں گناہوں سے جو محجبوب ہوا خوب ہوا

داغ دھلوی